قیام امن کیلئے پاکستان ہمیشہ مثبت مصالحانہ کردار ادا کرتا رہے گا، وزیرخارجہ

وزیرخارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ قیام امن کیلئے پاکستان ہمیشہ مثبت مصالحانہ کردار ادا کرتا رہے گا۔

تفصیلات کے مطابق وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے پاکستانی قونصل خانہ دبئی میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینا چاہتے ہیں،اس سلسلے میں ہم دوسری جماعتوں کے ساتھ مشاورت میں ہیں۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ ہمارا بیرون ملک مقیم پاکستانی، پاکستان کی سیاست اور پالیسی سازی میں شامل ہو سکے۔

شاہ محمود قریشی نے یہ بھی کہا کہ میں واضح کرنا چاہتا ہوں کہ ہندوستان اور پاکستان کے درمیان کوئی باضابطہ بیک چینل رابطہ نہیں ہے۔

وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ گذشتہ ڈھائی سالوں میں ہندوستان کی پاکستان کو عالمی سطح پر تنہا کرنے کی کوششیں ناکامی سے دوچار ہوئیں۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ میری ہندوستان کے وزیر خارجہ امور جے شنکر سے کوئی ملاقات طے نہیں،ہندوستان اور پاکستان کی گفتگو جب بھی ہوگی اس کیلئے ہمیں دو طرفہ سوچنا ہوگا۔

شاہ محمود قریشی کا یہ بھی کہنا تھا کہ پاکستان کبھی مذاکرات سے نہیں بھاگا،ہم اپنے تمام ہمسایوں بشمول ہندوستان کے ساتھ پرامن رہنے کے حامی ہیں۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ اگر ہندوستان 5 اگست کے اقدامات پر نظر ثانی کرتا ہے تو ہم بات چیت کیلئے تیار ہیں۔

شاہ محمود قریشی نے افغانستان کے حوالے سے بات کرتے ہوئے کہا کہ افغان امن عمل اہم مرحلہ میں داخل ہو چکا ہے،بہت سے ممالک افغانستان میں قیام امن کیلئے کوششیں کر رہے ہیں۔

وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ بیرون ملک مقیم پاکستانی ہمارا بہت بڑا اثاثہ ہیں ،وہ اپنی محنت کی کمائی کا پیسہ پاکستان بھجواتے ہیں اور ملکی معیشت کو مستحکم بناتے ہیں۔

شاہ محمود قریشی کا یہ بھی کہنا تھا کہ یورپی یونین کے ساتھ ہمارے تعلقات بہتر ہوے ہیں جبکہ اسلامی ممالک کے ساتھ ہمارے تعلقات میں بہتری آئی ہے ،ہم خطے میں امن کے خواہاں ہیں،امن آئے گا تو معیشت بہتر ہونا شروع ہو گی۔

وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے پاک ایران تعلقات کے حوالے سے کہا کہ ایران ہمارا اہم برادر ملک ہے ۔ایران، افغانستان کا ہمسایہ بھی ہے اور ان کی افغان امن عمل میں دلچسپی بھی ہے ان کے خیالات سے استفادے کا موقع میسر آئے گا۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here